May 19, 2024

Warning: sprintf(): Too few arguments in /www/wwwroot/mrcapwebpage.com/wp-content/themes/chromenews/lib/breadcrumb-trail/inc/breadcrumbs.php on line 253
اسرائیل پر ایرانی حملے پر مختلف ممالک کا ردعمل

ایران کے یہ کہنے کے بعد کہ اس نے ہفتے کی رات اسرائیل پر درجنوں ڈرون اور میزائل داغے، کئی ممالک نے اتوار کو ردِعمل جاری کیا۔

متحدہ عرب امارات کی وزارتِ خارجہ نے اتوار کو ایک بیان میں کہا کہ ملک نے مشرقِ وسطیٰ میں خطرناک اثرات سے بچنے کے لیے انتہائی تحمل کا مظاہرہ کرنے پر زور دیا۔نیز متحدہ عرب امارات نے تنازعات کو مذاکرات اور سفارتی ذرائع سے حل کرنے پر بھی زور دیا۔یکم اپریل کو دمشق میں ایران کے سفارت خانے کے احاطے پر مشتبہ اسرائیلی فضائی حملے کے جواب میں ایران نے راتوں رات اسرائیل پر میزائل اور ڈرون داغے جس سے وسیع تر علاقائی تنازعے کا خطرہ پیدا ہو گیا۔روس نے کہا وہ ان حملوں پر انتہائی تشویش کا شکار تھا اور اس نے تمام فریقین سے تحمل کا مظاہرہ کرنے کا مطالبہ کیا لیکن کہا کہ اسرائیل اور فلسطینیوں کے درمیان تنازعہ کے حل ہونے تک کشیدگی برقرار رہے گی۔روس کی وزارتِ خارجہ نے ایرانی حملوں پر ایک بیان میں کہا، “ہم خطے میں ایک اور خطرناک کشیدگی پر اپنی شدید تشویش کا اظہار کرتے ہیں۔ ہم اس میں شامل تمام فریقین سے تحمل کا مظاہرہ کرنے کا مطالبہ کرتے ہیں۔”روس نے نوٹ کیا کہ تہران نے کہا تھا کہ یہ حملہ اپنے حقِ دفاع میں دمشق میں ایرانی قونصل خانے پر اسرائیل کے حملے کے بعد کیا گیا تھا جس کی ماسکو نے مذمت کی تھی۔ایران کے ساتھ قریبی تعلقات رکھنے والے روس نے کہا کہ مغرب نے قونصل خانے پر اسرائیلی حملے کا جواب دینے کے لیے اقوامِ متحدہ کی سلامتی کونسل میں کوششوں کو روک دیا تھا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *